021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
نماز کے دوران نگاہ کہاں ہو؟
72130نماز کا بیاننماز کی سنتیں،آداب اورپڑھنے کا طریقہ

سوال

نماز کے مختلف ارکان میں نگاہ کہاں رکھنی چاہیے؟

o

نماز میں قیام کے دوران نگاہ سجدے کی جگہ پر، رکوع میں پاؤں کی جانب، سجدے میں ناک کی طرف، قعدہ کے دوران گود میں اور سلام کے وقت کندھوں پر ہونی چاہیے۔

حوالہ جات

قال العلامۃ الحصکفی رحمہ اللہ تعالٰی:   (ولها آداب) تركه لا يوجب إساءة، ولا عتابا، كترك سنة الزوائد، لكن فعله أفضل (نظره إلى موضع سجوده حال قيامه، وإلى ظهر قدميه حال ركوعه، وإلى أرنبة أنفه حال سجوده، وإلى حجره حال قعوده. وإلى منكبه الأيمن والأيسر عند التسليمة الأولى والثانية) لتحصيل الخشوع.
وقال تحتہ العلامۃ ابن عابدین الشامی رحمہ اللہ تعالٰی: قوله: (وإلى أرنبة أنفه) أي طرفه، قاموس. قوله: (وإلى حجره) بكسر الحاء والجيم والراء المهملة: ما بين يديك من ثوبك، قاموس. (ردالمحتار: 477/1)

محمد عبداللہ بن عبدالرشید

دارالإفتاء جامعۃ الرشید کراچی

15/ رجب المرجب/ 1442ھ

n

مجیب

محمد عبد اللہ بن عبد الرشید

مفتیان

فیصل احمد صاحب / شہبازعلی صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔