021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
شوہرکی حرام کمائی سے فیملی کافائدہ اٹھانے کاحکم
..نان نفقہ کے مسائلنان نفقہ کے متفرق مسائل

سوال

بینک کی کمائی ناجائزہونے کی صورت میں ان کے گھروالوں کے لئے اس کمائی سے فائدہ حاصل کرنے کاکیاحکم ہے؟

o

حرام مال حرام ہی ہوتاہے،لہذاایسی صورت میں جب گھرکےسربراہ کی ملازمت سودی معاملات کے ساتھ وابستہ ہوگھرکے دیگرافرادکوکوشش کرنی چاہیےکہ حلال ذرائع سےآمدنی حاصل کرنے کی کوئی صورت نکالیں اورحرام کی کمائی سے اجتناب کریں،اوراگرکوئی صورت نہ نکلے تووہ افراد جن کاخرچہ شرعی طورپراس کے ذمہ لازم ہے جیسے بیوی اورنابالغ بچے توان کے لئے اس مال سے فائدہ حاصل کرنے کی گنجائش ہے،اس صورت میں توبہ استغفاربھی کرتے رہیں ،نیزیہ کہ اس صورت میں متعلقہ شخص کوحرام کمائی سے بچانے کی مسلسل کوشش کرناگھرکے تمام افراد کی ذمہ داری ہے۔

حوالہ جات

حاشية رد المحتار (ج 6 / ص 490): ”وفي جامع الجوامع: اشترى الزوج طعاما أو كسوة من مال خبيث جاز للمرأة أكله ولبسها والاثم على الزوج.
..

n

مجیب

محمد اویس صاحب

مفتیان

سیّد عابد شاہ صاحب / سعید احمد حسن صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔