021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
HBLبینک سے قسطوں پر گاڑی نکلوانا
62178جائز و ناجائزامور کا بیانخریدو فروخت اور کمائی کے متفرق مسائل

سوال

سوال:ایچ بی ایل بینک سے قسطوں پر گاڑی نکلوانا جائز ہے یا نہیں؟

o

ایچ،بی،ایل ایک سودی بینک ہے ،اور سودی بینک سے معاملات جائز نہیں ، کیونکہ سود کی حرمت قرآن وسنت کے واضح دلائل سے ثابت ہے،سودی لین دین کرنے یا اس میں کسی بھی طریقے سے شریک ہونے پر قرآن وحدیث میں سخت وعیدیں آئی ہیں،اس لیے ایچ،بی،ایل بینک سے قسطوں پر گاڑی نکلوانا جائز نہیں۔

حوالہ جات

"صحيح مسلم للنيسابوري " (ج 5 / ص 50) : عن جابر قال لعن رسول الله صلى الله عليه وسلم آكل الربا وموكله وكاتبه وشاهديه وقال هم سواء.
..

n

مجیب

محمد طارق صاحب

مفتیان

آفتاب احمد صاحب / محمد حسین خلیل خیل صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔