021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
خالی گھر میں داخل ہوتے وقت سلام کہنا
..جائز و ناجائزامور کا بیانسلام اورچھینک کا جواب دینے کے آداب

سوال

: کیا فرماتے ہیں علماء کرام اس مسئلہ کے بارے میں کہ بعض لوگ ایسے گھر میں جس میں کوئی رہتا نہیں داخل ہوتے وقت ایسے سلام کرتے ہیں جس طرح کسی انسان کو کیا جاتا ہے،کیا انسان کے علاوہ کسی اور کو بھی سلام کہنا درست ہے؟اگر درست ہے تو کن الفاظ سے سلام کہنا چاہیے؟

o

خالی گھر میں داخل ہوتےوقت ان الفاظ سے سلام کرنا چاہیے:"السلام علینا وعلی عبادہ اللہ الصالحین".فرشتے اس سلام کا جواب دیتے ہیں۔

حوالہ جات

قال العلامۃ ابن عابدین رحمہ اللہ تعالی:" قوله:( وإذا أتى دار إنسان إلخ):…وإن دخل بيتا ليس فيه أحد يقول :السلام علينا وعلى عباد الله الصالحين؛فإن الملائكة ترد عليه السلام ." (رد المحتار علی الدر المختار:6/413،دار الفکر،بیروت)
..

n

مجیب

متخصص

مفتیان

ابولبابہ شاہ منصور صاحب / فیصل احمد صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔