021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
عقدِمضاربت کی ایک صورت
..مضاربت کا بیانمتفرّق مسائل

سوال

ایک آدمی دوسرے آدمی کو پیسہ دیتا ہے کہ گنے والی مشین خرید کر چلاؤ، جو منافع ہوگا وہ نصف نصف ہوگا۔ کیا ایسا کرنا جائز ہے؟ اگر جائز نہیں تو کونسی صورت حلال اور جواز کی ہے؟ جزاک اللہ ۔

o

یہ معاملہ جائز ہے۔ اس قسم کا معاملہ شریعت میں مضاربت کہلاتاہے۔

حوالہ جات

مجلة الأحكام العدلية (1 / 271): المادة (1404) المضاربة نوع شركة على أن يكون رأس المال من طرف والسعي والعمل من الطرف الآخر مجلة الأحكام العدلية (1 / 272): يشترط في المضاربة أن يكون رأس المال معلوما كشركة العقد أيضا وتعيين حصة العاقدين من الربح جزءا شائعا كالنصف والثلث
..

n

مجیب

متخصص

مفتیان

سیّد عابد شاہ صاحب / محمد حسین خلیل خیل صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔