021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
گھر پر جماعت تراویح کے لیے مسجد کی جماعت عشاء چھوڑنا
76505نماز کا بیانتراویح کابیان

سوال

مسجد گھر كے قریب ہونے كے با وجود كچھ حفاظ جو گھر پر ہی تراویح پڑھتےہیں،وہ مسجد میں عشاء كی نماز پڑھنے نہیں جاتے، بلكہ گھر میں ہی با جماعت عشاءكی نماز پڑھ كر سنتیں پڑھ كے تراویح شروع كر دیتے ہیں، اس كا شرعًا كیا حكم ہے؟

o

گھر میں جماعت تراویح کی وجہ سے مسجد کی جماعت عشاء چھوڑنا جائز نہیں ،اس لیے کہ مسجد کی جماعت کے ساتھ نماز پڑھنا سنت مؤکدہ ہے اور سنت مؤکدہ کا بلاعذر چھوڑنا ناجائز اور گناہ ہے۔

حوالہ جات

۔۔۔۔۔

نواب الدین

دار الافتاء جامعۃ الرشید کراچی

۲۰شعبان۱۴۴۳ھ

n

مجیب

نواب الدین صاحب

مفتیان

سیّد عابد شاہ صاحب / محمد حسین خلیل خیل صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔