021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
سلام پھیرنے سےپہلے شک ہواکہ سجدہ سہو کیاہےیانہیں ؟
55885.3نماز کا بیانسجدہ سہو کابیان

سوال

: بعض مرتبہ سلام پھیرنے سے پہلے شک ہوجاتاہے ،کہ آیاسجدہ سہوکرلیاہے یانہیں تواب کیاکرے اوراس طرح دوبارہ سجدہ سہوواجب ہوگا؟

o

جس طرف غالب گمان ہواس پرعمل کرے ،اگر غالب گمان ہواکہ سجدہ سہو کرلیاہے توسلام پھیرلے ،اوراگر غالب گمان ہواکہ سجدہ سہونہیں کیاتواب سجدہ سہو کرلے ،لیکن اگرسجدہ سہو کرناہی یاد نہیں رہاتونماز کااعادہ ضروری ہوگا۔

حوالہ جات

"حاشیۃ الطحطاوی علی مراقی الفلاح" 1/250 : قال العلامہ الطحاوی رحمہ اللہ تعالی فلواقتصر علی سجدۃ واحدۃ لایکون آتیابالواجب ولاشیئ علیہ ان کان ساھیا،وان تعمدہ یأثم ،وفی البحر لوسہافی سجودالسہو لایسجد لھذالسہو،وفی المضمرات لوسہافی سجودالسہوعمل بالتحری ،ولایجب علیہ سجودالسہولئلایلزم التسلسل ولأنہ یغتفر فی التابع مالایغتفر فی المتبوع ۔ "ردالمحتارعلی الدرالمختار" 1ص459 : وقال التمرتاشی رحمہ اللہ تعالی یجب لہ بعد سلام واحد سجدتان ۔ "المتانۃ"/ 231 : وقال فی المتانہ عازیاالی التہذیب :السہو فی سجودالسہولایوجب السجود لأنہ لایتناھی ۔
..

n

مجیب

محمّد بن حضرت استاذ صاحب

مفتیان

سیّد عابد شاہ صاحب / سعید احمد حسن صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔