021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
ایزی پیسہ اکاؤنٹ میں پیسے رکھنے پر، ملنےوالے فری منٹس کا حکم
..سود اور جوے کے مسائلسود اورجوا کے متفرق احکام

سوال

ایزی پیسہ اکاؤنٹ میں جب ہم پیسے رکھتے ہیں تو کمپنی والے ہمیں فری منٹس دیتے ہیں تو کیا اس کا استعمال جائز ہے یا نہیں؟ وضاحت کی درخواست ہے۔

o

موبائل اکاؤنٹ میں رکھی ہوئی رقم قرض ہوتی ہے۔اور قرض پر ملنے والا مشروط نفع سود اور ربا ہوتا ہے۔ مذکورہ صورت میں کمپنی کی طرف سے ملنے والے فری منٹس چونکہ مشروط نفع کے حکم میں ہے، اس لیے یہ سود ہے۔ ان فری منٹس کا استعمال جائز نہیں۔

حوالہ جات

بدائع الصنائع في ترتيب الشرائع (6 / 83): «نهى رسول الله - صلى الله عليه وسلم - عن قرض جر نفعا» الدر المختار وحاشية ابن عابدين (5 / 166): (قوله كل قرض جر نفعا حرام) أي إذا كان مشروطا۔
..

n

مجیب

متخصص

مفتیان

محمد حسین خلیل خیل صاحب / سعید احمد حسن صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔