021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
مقتدی کاامام کے اٹھنےکےبعد رکوع میں شرکت کاحکم
68987نماز کا بیانمسبوق اور لاحق کے احکام

سوال

امام نےرکوع سےاٹھتےوقت تکبیرنہ کہی ہو، دو تین سیکنڈ تک کھڑارہااتنےمیں مقتدنیت کرکےہاتھ باندھ کر رکوع میں شامل ہوا،اس کےبعد امام نےتکبیرکہی تو کیا مقتدی کی یہ رکعت ضائع ہوگئی یانہیں؟

o

امام جب رکوع سےقیام کی طرف آجائےتو رکوع کاوقت ختم ہوجاتاہے،صورت مذکورہ میں جب امام نےرکوع سےسر اٹھالیاتو مقتدی کی وہ رکعت فوت ہوگئی،اس لیےکہ رکوع میں شامل ہونے کےلیےامام کےساتھ رکوع میں شرکت لازم ہے،جبکہ وہ نہیں پائی گئی۔

حوالہ جات

المحيط البرهاني في الفقه النعماني (2/ 211) وإن ركع المسبوق وسوى ظهره صار مدركاً للركعة قدر على التسبيح أو لم يقدر، وإن لم يقدر على تسوية الظهر في الركوع حتى رفع الإمام رأسه فاته الركوع.
..

n

مجیب

متخصص

مفتیان

آفتاب احمد صاحب / سعید احمد حسن صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔