021-36880325,0321-2560445

5

ask@almuftionline.com
AlmuftiName
فَسْئَلُوْٓا اَہْلَ الذِّکْرِ اِنْ کُنْتُمْ لاَ تَعْلَمُوْنَ
ALmufti12
حدیث”جو درود بھول گیا وہ جنت کا راستہ بھول گیا”کی تخریج
75503حدیث سے متعلق مسائل کا بیانمتفرّق مسائل

سوال

جوشخص نبی علیہ السلام پر درود پڑھنا بھول گیا وہ جنت کا راستہ بھول گیا"کیا یہ حدیث صحیح ہے؟

o

یہ حدیث مصنف ابن ابی شیبۃ میں مذکور ہے اور اس کی سند کو درست قرار دیا گیا ہے۔جس کا ترجمہ یہ ہے کہ حضور علیہ السلام نے فرمایا: جس کے سامنے میرا تذکرہ ہو اور وہ مجھ پر درود پڑھنا بھول گیا،قیامت کے دن وہ جنت کا راستہ بھٹک جائے گا۔

حوالہ جات

حدثنا حفص بن غياث عن جعفر عن أبيه قال: قال رسول الله صلى الله عليه وسلم: «‌من ‌ذكرت ‌عنده فنسي الصلاة علي خطئ طريق الجنة يوم القيامة.وقال الشیخ عوامہ حفظہ اللہ تعالی تحت ھذا الحدیث:نقل عن الرشید العطار أنہ حسن إسنادہ،وعن أبی موسی المدینی أنہ روی من حدیث أربعۃ آخرین من الصحابۃ،ویروی من حدیث جابر،قال الرشیدالعطار أیضا:إسنادہ جید حسن(مصنف ابن أبي شیبۃ،کتاب الفضائل :16/509(رقم الحدیث:32453)

محمد انس جمال          

دارالافتاء جامعۃ الرشید کراچی

19جمادی الثانیۃ1443ھ

 

n

مجیب

انس جمال بن جمال الدین

مفتیان

فیصل احمد صاحب / شہبازعلی صاحب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔